Yahan Boht Hain Malala

وہ روشنی ہے سو اس کا حوالہ ایک نہیں

یہاں بہت ہیں ملالہ ، ملالہ ایک نہیں

سیاہ شب کے افق تاب روزنوں کی قسم

بہت سی روشنیاں ہیں اجالا ایک نہیں

یہ کہکشاں ، یہ ستارے ، یہ چاند ، یہ سورج

دیارِ نور میں نازوں کا پالا ایک نہیں

مہ تمام ، زمیں کو نگاہ بھر کے تو دیکھ

جو اس کے گرد بنا ہے وہ ہالہ ایک نہیں

یہ سب پسند کے مظلوم چُن رہے ہیں سعو د

ستم تو یہ ہے ستم کرنے والا ایک نہیں

سعود عثمانی

اس پوسٹ کو شیئر کریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔