Qudrat Ke Imtehaan Se Lagta Hay Dur Mujhay | Shuja Shaz

Qudrat Ke Imtehaan Se Lagta Hay Dur Mujhay | Shuja Shaz
قدرت کے امتحان سے لگتا ہے ڈر مجھے
برسا ت میں مکان سے لگتا ہے ڈر مجھے

کرتا ہوا شکار نہ ہو جاؤں خود شکار
ٹوٹی ہوئی کمان سے لگتا ہے ڈر مجھے

ہر زخم کے نشان میں اِک داستان ہے
ہر زخم کے نشان سے لگتا ہے ڈر مجھے

میرے پروں کو تیرا سہارا ضروری ہے
تیرے بِنا اُڑان سے لگتا ہے ڈر مجھے

میرے تمام راز کسی پر نہ کھول دے
خاموشی کی زبان سے لگتا ہے ڈر مجھے

مالک الگ جہان بنا دے مرے لیے
مالک ترے جہان سے لگتا ہے ڈر مجھے

مجھ کو بھی کوئی شاذؔ نہ لے جائے شاخ سے
پھولوں کی ہر دُکان سے لگتا ہے ڈر مجھے

شجاع شاذ

#salamurdu #urdupoetry #urdughazals #shujashaz

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More