مشاعرے کے لئے قید طرح کی کیا ہے

مشاعرے کے لئے قید طرح کی کیا ہے
یہ اک طرح کی مشقت ہے شاعری کیا ہے
جو چاہتے ہیں کہ میں طرح میں غزل لکھوں
انہیں خبر ہی نہیں میری پالیسی کیا ہے
غزل جو طرح میں لکھی ہے کس طرح لکھی
یہ پوچھنے کی کسی کو اتھارٹی کیا ہے
غزل کی شکل بدل دی ہے آپریشن سے
سخنوری ہے اگر یہ تو سرجری کیا ہے
میں جب غزل میں گلستان کا ذکر کرتا ہوں
وہ پوچھتے ہیں گلستاں کی فارسی کیا ہے
غزل کے بدلے اگر کچھ معاوضہ مل جائے
میں سوچتا ہوں تو پھر شاعری بری کیا ہے
میری غزل میں تخلص کسی کا فٹ کر دو
تخلصوں کی بھی اس شہر میں کمی کیا ہے
دلاور فگار

اس پوسٹ کو شیئر کریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے