محبت خاک کر دے گی

کہا تھا ناں
محبت خاک کر دے گی
جلا کر راکھ کر دے گی
کہیں بھی تم چلے جاؤ
کسی کے بھی بنو تم جس کسی کو چاہے اپناؤ
ہماری یاد سے پیچھا چھڑانا
اس قدر آساں نہیں جاناں
کہا تھا ناں
محبت خاک کر دے گی
جلا کر راکھ کر دے گی
فاخرہ بتول

اس پوسٹ کو شیئر کریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے