مرے ہم نفس مرے ہم زباں مرے مہرباں

مرے ہم نفس مرے ہم زباں مرے مہرباں
رہے پیار یوں سدا درمیاں مرے مہرباں
ترے پیار کا مرے پیار سے ہے یہی گلہ
مین نہ بن سکا ترا مہرباں مرے مہرباں
تجھے چھوڑ کر چلا جاؤں گا نہیں آؤں گا
یہی وسوسے رہے درمیاں مرے مہرباں
میں بکھر گیا تری راہ میں تری چاہ میں
تجھے مل سکا نہ مرا نشاں مرا نشاں مرے مہرباں
تری آگ میں یہ سکون ہے کہ جنون ہے
تری دھوپ ہے مرا سائباں مرے مہرباں
شجاع شاذ 

اس پوسٹ کو شیئر کریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے