Bohat Hi Mehngi Mujhe | Azhar Faragh | Urdu Ghazal | بہت ہی مہنگی مجھے اپنی زندگانی پڑی

بہت ہی مہنگی مجھے اپنی زندگانی پڑی
وہ اس لیے کہ ترے ہجر میں بِتانی پڑی
کچھ اتنا سہل نہ تھا روشنی سے بھر جانا
نظر دیے پہ بڑی دیر تک جمانی پڑی
مری انا کے تقاضے نہ ہو سکے پورے
میں سر اٹھا کے چلا تو نظر جھکانی پڑی
قدم قدم پہ ہزیمت کا سامنا ہے مجھے
قدم قدم پہ اگرچہ ہے کامرانی پڑی
خطوں کو کُھولتی دِیمک کا شکریہ ورنہ
تڑپ رہی تھی لفافوں میں بے زُبانی پڑی
پرانے غم پہ نئی مے ہے بے اثر اظہر
کہیں سے ڈھونڈ کے لائے کوئی پرانی پڑی
#azhar #azharfaragh #salamurdu #urdupoetry #urdughazals

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More