بے قرار آنکھ میں بے زار ہیں مرے آنسو

بے قرار آنکھ میں بے زار ہیں مرے آنسو
تیرے دامن کے طلب گار ہیں مرے آنسو
یا ترے نقش گریزاں ہیں مری آنکھوں سے
یا مری راہ میں دیوار ہیں مرے آنسو
اپنے آنچل پہ سجانے کو ستارے نہ سمجھ
آگ ہی آگ ہے انگار ہیں مرے آنسو
شجاع شاذ

اس پوسٹ کو شیئر کریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے