Ab Tere Payar | اب تیرے پیار کی تشہیر | Shuja Shaz

اب تیرے پیار کی تشہیر مرے بس میں نہیں

ٹوٹ جاتی ہے یہ زنجیر مرے بس میں نہیں

رنگ بکھرے ہوئے ہر سمت نظر آتے ہیں

اب دھنک میں تری تصویر مرے بس میں نہیں

میں ہدف کو تو کہیں دور چھُپا سکتا ہوں

جانتا ہوں کہ ترا تیر مرے بس میں نہیں

حکم تھا، خواب میں ، صحرا کو میں سیراب کروں

خواب ایسا ہے کہ تعبیر مرے بس میں نہیں

اے محبت تیری بنیاد نہیں رکھ پایا

یہ ہی افسوس ہے تعمیر مرے بس میں نہیں

شاذ کیسا ہے یہ شکوہ ترا دیوانے سے

جانتا تُو بھی ہے تقدیر مرے بس میں نہیں

شجاع شاذ

#urdupoetry #salamurdu #shujashaz #shuja

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More